طلال چوہدری کیخلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ 2 اگست کو سنایا جائے گا

اسلام آباد: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما طلال چوہدری کیخلاف توہین عدالت کیس کا فیصلہ 2 اگست کو سنایاجائے گا۔

ذرائع کے مطابق فیصلہ جسٹس گلزار کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ سنائے گا اور سپریم کورٹ نے توہین عدالت کیس کا فیصلہ11جولائی کو محفوظ کیا تھا۔

قبل ازیں پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما طلال چوہدری کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ کیا مدینہ کی ریاست میں اجازت جوڑ توڑ کی اجازت تھی اور کل کا ڈاکو آج کا بھائی پرویزالہیٰ۔

ن لیگ کے رہنما طلال چوہدری کا کہنا تھا کہ حلقے کھولنے کا نہیں کہہ رہے، صرف آراو آفس کی فوٹیج منگوالیں اور ہمیں اقتدار کی نہیں اقدار کی خواہش ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں ایسی کسی حکومت کی خواہش نہیں جس میں خرید و فروخت ہو اور حکومت بنے یا اپوزیشن ہو اصولوں کی سیاست کرتے رہیں گے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما مصدق ملک میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن نے ذمہ داری پوری نہیں کی ہے اور ہم این آر او کے بغیر پنجاب میں حکومت بنائیں گے۔

مصدق ملک کا کہنا تھا کہ حق پرست آزاد امیدواروں سے ملکر پنجاب میں حکومت بنائیں گے اور کس کے ساتھ این آر او ہو رہا ہے، ہمیں پارٹی کا نام بتائیں؟ انہوں نے مزید کہا کہ ہمارا کھیل پنجاب تک محدود نہیں ہوگا۔