سعودی اتحادی فورسزنےریاض میزائل حملےکاالزام ایران پرعائدکردیا

ریاض: سعودی دارالحکومت ریاض کےخالدایئرپورٹ پرمیزائل حملے کے بعد سعودی اتحادی فورسزکی جانب سےبیان جاری کیا گیا ہے جس میں انہوں نے ریاض میزائل حملے کا الزام ایران پر عائد کیا ہے ۔

انکے بیان  کے مطابق ایرانی حمایت یافتہ حوثی باغیوں نےبیلسٹک میزائل داغا جو کہ  یمن سےریاض کےشمالی مشرقی علاقےمیں داغاگیا۔ لیکن میزائل کو ایئرپورٹ کےقریب ہی راستےمیں تباہ کردیاگیاتھا۔

اس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ ماہرین نےتباہ شدہ میزائل کےملبےکاتکنیکی مشاہدہ کیا۔حوثی باغیوں کوایران سےہتھیارفراہم کرنےکےشواہد بھی ملےہیں۔

سعودی اتحادی فورسز کے مطابق میزائل حملےکوجنگی عمل سمجھاجاسکتاہے۔ حملےکےبعدیمن میں فضائی،سمندری،زمینی راستے بند کردیے گئے ہیں ۔ تاکہ حوثی باغیوں کوایرانی ہتھیاروں کی فراہمی روکی جاسکے۔

ہتھیاروں کی فراہمی یواین کےچارٹرکی خلاف ورزی ہے۔ ہتھیاروں کی فراہمی سےعالمی امن کوخطرات لاحق ہوچکےہیں۔ دہشتگردوں کوہتھیاروں کی فراہمی پرپابندی عائدہے۔

سعودی اتحادی فورسز نے ہتھیاروں کی فراہمی پرقانونی چارہ جوئی کابھی اعلان کیا ہے اور متحدہ کی سیکیورٹی کونسل سےنوٹس لینےکامطالبہ بھی کیا ہے ۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay