صدر و وزیر اعظم، چیف جسٹس و دیگر کا عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر اظہار تعزیت

اسلام آباد: صدر ممکت ممنون حسین ، وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سمیت دیگر سیاسی و سماجی رہنماؤں کی جانب سے ماہر قانون عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ عاصمہ جہانگیر کی خدمات ناقابل فراموش ہیں۔

صدرمملکت ممنون حسین کی جانب سے جاری تعزیتی پیغام میں کہا گیا ہے کہ عاصمہ جہانگیرنےجمہوریت کے استحکام کے لیے ناقابل فراموش کرداراداکیا۔ انکا کہنا تھا کہ عاصمہ جہانگیر کا انتقال وکلا برادری کے لیے بہت بڑا نقصان ہے۔

عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ آج ملک ایک نڈر، بہادر اور اصول پسند شخصیت سے محروم ہوگیا اور بے زبانوں، بے سہاروں اور ظالموں کے ستائے ہوئے مظلوموں کی آواز آج ہمیشہ کے لیے خاموش ہوگئی۔

چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے بھی عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کیا۔

چیئرمین سینیٹ رضاربانی نے مرحومہ عاصمہ جہانگیرکی صاحبزادی منیزہ جہانگیرکوفون کرکے والدہ کے انتقال پرتعزیت کی۔ انہوں نے عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر گہرے دکھ اورافسوس کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ مرحومہ نے پوری زندگی قانون کی حکمرانی کی، انکی

آئین اور قانون کی بالادستی کے لیے خدمات ناقابل فرموش ہیں۔عاصمہ جہانگیرکی خدمات ہمیشہ یادرکھی جائیں گی۔

اسپیکرقومی اسمبلی ایاز صادق نے عاصمہ جہانگیر کی وفات پر افسوس کااظہار کرتے ہوئے کہا کہ عاصمہ جہانگیرایک بہادراوردلیرخاتون تھیں، انہوں نے جمہوریت کی بحالی اور خواتین کے حقوق کے لیے قربانیاں دی۔ عاصمہ جہانگیرکی قانونی،معاشرتی خدمات کو یاد رکھا جائے گا۔ اسپیکروڈپٹی اسپیکر نے مرحومہ کےثواب اورلواحقین کےلیےصبروجمیل کی دعا کی ۔

گورنرپنجاب رفیق رجوانہ نے اپنے تعزیتی پیغام میں کہا کہ مرحومہ کی  خدمات ناقابل فراموش ہیں، انہوں نے انسانی حقوق کے تحفظ کے لیے سخت جدوجہد کی۔

وزیراعلیٰ سندھ مرادعلی شاہ کاعاصمہ جہانگیرکےانتقال پرگہرے دکھ کااظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ عاصمہ جہانگیرکی انسانی حقوق کے لیے جدو جہد ناقابل فراموش ہے۔

سابق وزیر اعظم نواز شریف کا عاصمہ جہانگیر کی وفات افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہنا تھا کہ مرحومہ آمروں کیخلاف ہرتحریک کے ہر اول دستے میں رہیں، انکی ناگہانی موت سے پیدا ہونے والا خلا مشکل سے پرہوگا۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ عاصمہ جہانگیرنےجمہوریت کےلیےبہادری سےجدوجہد کی۔ پیپلز پارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو نے سماجی روابط کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے تعزیتی پیغام میں کہنا تھا کہ پاکستانی قوم ایک دلیربیٹی اورماں کے انتقال پر غمزدہ ہے۔ ملک ایک جمہوری شمع سےمحروم ہوگیا ہے ۔ مرحومہ نے زندگی بھرجمہوریت،قانون کی بالادستی کے لیے جدوجہد کی۔

لاہورہائیکورٹ بار نے بھی عاصمہ جہانگیر کے انتقال پر3روزہ سوگ کااعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ وکلاء کل عدالتوں میں پیش نہیں ہوں گے۔

واضح رہے کہ معروف ماہر قانون و سماجی کارکن عاصمہ جہانگیر  11 فروری کی صبح لاہور میں حرکت قلب بند ہوجانے کے باعث  66 برس کی عمر میں وفات پاگئیں۔ مرحومہ 27 جنوری 1952ء کو لاہور میں پیدا ہوئیں تھیں۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay