جنوبی افریقہ کے ہاتھوں پاکستان کو ٹیسٹ سیریز میں وائٹ واش

جوہانسبرگ: جنوبی افریقہ نے پاکستان کو 3 میچز پر مشتمل سیریز کے تیسرے میچ میں 107 رنز سے شکست دیکر ٹیسٹ سیریز میں وائٹ واش کردیا۔

پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان 3 ٹیسٹ میچز پر مشتمل سیریز کا آخری ٹیسٹ میچ جوہانسبرگ میں کھیلا گیا۔ چوتھے دن کے کھیل کا آغاز ہوا تو مہمان ٹیم کی جانب سے بابراعظم اور اسد شفیق کریز پر موجود تھے۔

پروٹیز بولرز نے دن کا آغاز بہت شاندار کیا اور قومی ٹیم کے بلے بازوں کو زیادہ دیر کریز پر روکنے نہیں دیا۔ شاہینوں کا چوتھا نقصان بابراعظم کا ہوا جو 21 رنز بناکر ڈین اولیور کی گیند پر وکٹ کیپر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

قومی ٹیم کے آگلے آنے والے بلے باز کپتان سرفراز احمد تھے جو آگلے ہی گیند پر ڈین اولیور کا شکار ہوکر پویلین لوٹ گئے۔ چھٹی وکٹ اسد شفیق کی گری جو 65 رنز بناکر فلینڈر کی گیند پر ڈین ایلگر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

پاکستان کی جانب سے ساتویں وکٹ فہیم اشرف کی گری جو 15 رنز بناکر کگیسو رابادا کی گیند پر ایڈن مرکرم کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔ آٹھواں نقصان محمد عامر کا ہوا جو 4 رنز بناکر کگیسو رابادا کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔

قومی ٹیم کی نویں وکٹ حسن علی کی گری جو 22 رنز بناکر کگیسو رابادا کی گیند پر انہیں کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔ آخری نقصان محمد عباس کا ہوا جو 9 رنز بناکر رن آؤٹ ہوئے۔

جنوبی افریقہ کی جانب سے کگیسو رابادا اور ڈین اولیور نے 3،3 کھلاڑیوں کو پویلین کا راستہ دیکھایا جبکہ ڈیل اسٹین نے 2 اور فلینڈر نے ایک وکٹ حاصل کی۔

کپتان سرفراز احمد:

کھیل ختم ہونے کے بعد قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ کسی سیریز میں وائٹ واش اچھا نہیں ہوتا ہے اور ہم موقع سے فائدہ نہیں اٹھا سکے۔ آج جنوبی افریقہ کے بالرز نے اچھی کارکردگی دکھائی ہے۔

سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ اسد شفیق، بابراعظم، شان مسعود نے اچھا کھیلا ہے جب کہ ہماری مجموعی کارکردگی اچھی نہیں تھی۔

مزید پڑھیے: تیسرے دن کا کھیل

پاکستان اسکواڈ:

سرفراز احمد (کپتان)، امام الحق، شان مسعود، اظہر علی، اسد شفیق، بابراعظم، شاداب خان، فہیم اشرف، محمد عامر، حسن علی اور محمد عباس شامل تھے۔

جنوبی افریقہ اسکواڈ:

ڈین ایلگر (کپتان)، ایڈن مرکرم، ہاشم آملہ، ڈی بریون، زبیر حمزہ، ٹیمبا باووما، کوائنٹن ڈی کوک، فلینڈر، کگیسو رابادا، ڈیل اسٹین اور ڈین اولیور شامل تھے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay