اسد قیصر ایوان کی بےعزتی نہ کرائیں، استعفیٰ دیکر گھر جائیں، شاہد خاقان

اسلام آباد: سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا ہے کہ اسد قیصر ایوان کی بےعزتی نہ کرائیں، استعفیٰ دے کر گھر جائیں۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ اسپیکر ایوان کو چلانے میں ناکام ہوچکے ہیں اور جو اسپیکراپوزیشن کو بولنے نہ دے وہ ہاؤس کیسے چلائے گا۔

شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ حکومتی ارکان اسپیکر کے خلاف ہوچکے ہیں اور ان کا اصل مقصد آئی ایم ایف بجٹ سے توجہ ہٹانا ہے۔ چاہے ایک مہینہ لگے اپوزیشن لیڈر بجٹ پر بات کریں گے۔

انکا کا کہنا تھا کہ کوئی کام ان سے نہیں ہورہا، یہ بندے مارنے کی بات کررہے ہیں اور اسپیکر اپنی، ایوان اور جمہوریت کی بےعزتی نہ کرائیں۔ اسپیکر صاحب استعفیٰ دے کر باعزت طور پر گھر چلے جائیں۔

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا کہ حکومت خود بجٹ کی مخالفت کررہی ہے، ہم کچھ نہیں کررہے اور حکومت جانتی ہے کہ یہ عوام دشمن بجٹ ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جو کچھ ہورہا ہے اس کے بعد وزیراعظم بات کرنے کے قابل نہیں ہوگا۔

عجیب حکومت ہےجواپوزیشن کی طرح احتجاج کرتی ہے،خواجہ آصف

سابق وزیر دفاع خواجہ آصف کا شاہد خاقان عباسی کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ عوام ان کی ناکامیوں کے نیچے دبتے چلے جارہے ہیں اور یہ لوگ اسمبلی چلنے نہیں دینا چاہتے ہیں۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ وزیراعظم خود اسمبلی نہ چلنے کی ہدایات دیتے ہیں اور عجیب حکومت ہے جو اپوزیشن کی طرح احتجاج کرتی ہے۔ ایوان کو چلانا حکومت کی ذمہ داری ہے اور جب سویلین طاقتیں ناکام ہوئیں تو آئین سے ماور اقدامات کیے گئے۔

سابق وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ حکومتی ناکامیوں کے ملبے تلےعوام دب رہے ہیں اور اسمبلی، کرکٹ، اکانومی یہ لوگ کچھ بھی سنبھال نہیں سکتے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسمبلی نہ چلنے سے قوم، جمہوریت اور آئین کا نقصان ہوگا۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay