چیئرمین سینیٹ کی تبدیلی کافیصلہ اے پی سی نے کرناہے، پرویزاشرف

نیوزون کے خصوصی پروگرام “پرائم ٹائم ودتھ ٹی ایم” میں سابق وزیر اعظم راجا پرویز اشرف نے شرکت کی اور ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال سمیت دیگر معاملات پر میزبان طارق محمود سے تبادلہ خیال کیا۔

پروگرام میں میزبان کے سوالات کے جواب دیتے ہوئے رہنماپی پی راجاپرویزاشرف نے کہا کہ حکومت چلانایقیناًبہت مشکل کام ہے، جتنی بڑی ذمہ داری ہوتی ہے اتنے ہی چیلنجزہوتے ہیں اور پاکستان جیسےملک میں حکومت کرنابہت مشکل کام ہے، ہمارےوسائل کم ہیں اور مسائل زیادہ ہیں، ہمیں بھی بڑےبڑےچیلنجزدرپیش تھے، سوات اورمالاکنڈآپریشن کاکریڈٹ افواج پاکستان کوجاتاہے، اس وقت ملک کو بہت بڑے چیلنجز درپیش ہیں، ملک میں خوف وہراس کی صورتحال ہے اور ملک میں احتساب ہوناچاہیے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ وزیراعظم، وزراء کونہیں کہنا چاہیے کہ میں کسی کوپکڑلوں گا، کسی کو بھی کسی کی تضحیک نہیں کرنی چاہیے اور الیکشن کےدوران کی جانےوالی کچھ باتیں الیکشن کےلیےہوتی ہیں، موجودہ حکومت نےعوام سےتبدیلی کاوعدہ کیا تھا، عمران خان نےکہاحالات ایسےہوجائیں قرضوں کی ضرورت نہیں ہوگی، کیاہم دوبارہ قرض نہیں لےرہے؟ کیاہم آئی ایم ایف کےپاس نہیں جارہے؟

راجاپرویزاشرف نے کہا کہ پی ٹی آئی میں شامل متعددلوگ ن لیگ یاپی  پی کے ہیں، حکومت بھی بدلی ہے اورحالات بھی بدتر ہوئے ہیں، ہماری اے پی سی میں عمران خان بھی شریک تھے، اوورسیزپاکستانی معمارِ پاکستان ہیں، پی ٹی آئی حکومت جانےکےبعدانکےبھی اسکینڈل سامنےآئیں گے، کون چور ہےکون ڈاکواس کافیصلہ عدالت کوکرناہے، ایک سال پہلےن لیگ کےلیڈرزکہتےتھےہمارےخلاف اسکینڈل نہیں۔

رہنماپیپلزپارٹی راجاپرویزاشرف نے کہا کہ ہم بھی انسان ہیں، کوئی فرشتےنہیں،  ہمارےرویوں میں شدت آگئی ہے، جس کی وجہ سے فضا خراب ہوگئی، کسی پرالزام لگانابہت معمولی بات ہے، رینٹل پاورکیس میں کرپشن نہیں تھی، اس کیس میں22ارب روپےکےاسکینڈل کا کہا جاتا ہے، مجھے بھی 22ارب روپے کا نہیں معلوم تھا، پتاچلاکمپنیوں کو22ارب روپےایڈوانس دیےگئےتھے، کوششوں کے بعد 22ارب روپے ایڈوانس کے واپس آگئے، نندی پورتاخیرکاشکارہواتوکیادیگرمنصوبےمیں تاخیرنہیں ہوتی؟

پرویزاشرف نے کہا کہ انصاف کی تشریح ہےکہ ایک جیسےکیسزایک جیسافیصلہ کیاجائے،نندی پورمیں بابراعوان،مجھ پرکرپشن کے کوئی چارجزنہیں، سب سے آسان کام الزام لگاناہوتاہے جب کہ راناثناءاللہ کاکیس عدالت جائے گا توحتمی فیصلہ آئےگا، کسی کوبھی حق نہیں کہ رانا ثنااللہ کے معاملے پر فیصلہ دے، آصف زرداری ساڑھے11سال جیل میں رہے اور جب زرداری بری ہوئے توکہاگیاکہ آپ کوباعزت بری کیا جاتا ہے۔

رہنماپیپلزپارٹی راجاپرویزاشرف نے کہا کہ اپوزیشن کاکرداربھی اہم ہوتاہے، کوئی حکومت بغیراپوزیشن کےحکومت نہیں اور کئی بارحکومت سے زیادہ بہترکرداراپوزیشن کاہوتاہے، اپوزیشن کی کوشش سےعوام کوفائدہ ہوناچاہیے۔

راجا پرویزاشرف کا کہنا تھا کہ 200 فیصد کے قریب گیس مہنگی کردی گئی ہے ،  زرداری کی گرفتاری سےملکی معاملات پراثرات مرتب ہوں گے جب کہ چیئرمین سینیٹ کی تبدیلی کافیصلہ اےپی سی نےکرناہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay