ایل این جی کیس: مفتاح اسماعیل کا 11 روزہ جسمانی ریمانڈ منظور

اسلام آباد: اسلام آباد کی احتساب عدالت نے ایل این جی کیس میں گرفتار سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل اور سابق ایم ڈی پی ایس او عمران الحق کو 11 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا۔

نیب نے ایل این جی کیس میں گرفتار سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل اور سابق ایم ڈی پی ایس او عمران الحق کو احتساب عدالت میں پیش کیا ۔

جج محمد بشیر کے چھٹی پر ہونے کی وجہ سے ڈیوٹی جج طاہر محمود نے کیس کی سماعت کی ۔ عدالت نےاستفسار کیا کہ پہلے یہ بتائیں کہ مفتاح اسماعیل کو کیوں گرفتار کیا ؟ کاز آف اریسٹ کہاں ہے؟ جس پر تفتیشی افسر نے وارنٹ گرفتاری کی نقل عدالت میں پیش کی۔

ڈیوٹی جج نے نے اپنے ریماکس میں نیب ٹیم کو ہدایت کی کہ ایک دو دن اس عدالت میں میری ڈیوٹی ہے آپ تیار ہو کر آئیں، دوسری صورت میں آپ کی کارکردگی پر ضرور لکھوں گا۔

مفتاح اسماعیل کے وکیل نے جسمانی ریمانڈ کی مخالفت کی تاہم عدالت نے دلائل سننے کے بعد مفتاح اسماعیل اور عمران الحق کو 11 روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کرتے ہوئے دونوں ملزمان کو 19 اگست کو دوبارہ عدالت کے سامنے پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay