پاک بھارت ایٹمی جنگ ہیروشیمااورناگاساکی سے زیادہ خطرناک ہوگی،صدرمملکت

نیوزون کے خصوصی پروگرام “پرائم ٹائم ودتھ ٹی ایم” میں صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی نے  خصوصی شرکت کی اور ملک کی موجودہ سیاسی صورتحال سمیت اہم معاملات پر میزبان طارق محمود سے تبادلہ خیال کیا۔

پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ کبھی صدربننے کاسوچانہیں تھا، ملکی مسائل کےحل کے بارے میں سوچتارہتاتھا، کراچی میں سیاست کرنےکیلئےخطرات مول لینےپڑتےہیں، کراچی میں جان ہتھیلی پررکھ کرسیاست کی، 2013 سے جلسوں میں دیکھاعوام تبدیلی چاہتےہیں، ہمیں معلوم تھادھاندلی کامقابلہ کرنےکی پوری کوشش کرنی ہے۔

صدرمملکت کا کہنا تھا کہ میڈیا کے بغیرعوام تک بات نہیں پہنچ سکتی، سوشل میڈیا کی پہلے لوگوں کوسمجھ نہیں تھی، پی ٹی آئی سوشل میڈیا میں تبدیلی لیکر آئی، صحت اورتعلیم بنیادی چیزیں ہیں جن پرتوجہ دیناہے، دیانتداری وہ فلسفہ ہےجس کوپکڑکررکھناہے، پی ٹی آئی چاہتی ہےپاکستان فلاحی ریاست بنے۔

ان کا کہنا تھا کہ معاشی طورپرکمزورصحیح لیکن دنیاسےدفاعی اندازمیں بات کرناچاہتےہیں، وقت اورحالات کے ساتھ فیصلے بدلنا پڑے ہیں،ہم نے کہا تھاکہ قرضے نہیں لیں گےمگرلینےپڑے، مشاورت کےبعدآرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع ہوئی،آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع مناسب فیصلہ ہے، مسلم منافرت کی کیفیت بھارت میں چل رہی تھی، بھارت میں مسلمانوں کودباؤڈالاجارہاتھا، مسئلہ کشمیر پر بھارت نےوعدوں کاپاس نہیں کیا، مقبوضہ کشمیرمیں کئی لاکھ افرادشہیدہوچکے ہیں۔

ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ اصولاًتقسیم کےوقت مسلم اکثریتی ریاست پاکستان کےپاس آنی تھی، کوئی بھی کشمیری بھارت کےحق میں نہیں ہے،کشمیریوں سے بچاکچھاریلیف بھی لےلیاگیا، بھارت میں مودی سرکارنےمسلم منافرت پیداکی، بھارت پاکستان پرمسلسل الزام تراشی کرتا رہتا ہے، ہٹلرسےمتاثرسرکارتباہ کن صورتحال پیداکرناچاہتی ہے، ہٹلرکی سوچ والوں سے دنیاخطرے میں آسکتی ہے اور مودی آگ سے نہ کھیلیں،یہ تباہ کن ہوگا۔

صدرمملکت نے کہا کہ بھارت کی جانب سے ایٹمی ہتھیاراستعمال کرنےکی دھمکی خطرناک ہے، بھارت سرکاری نازی فلسفے سے متاثر ہے، ہٹلرسے متاثر مودی سرکارکے ہاتھ میں ایٹمی ہتھیارکا بٹن دنیاکےلیے خطرناک ہے،  پاک بھارت ایٹمی جنگ ہیروشیما اور ناگاساکی سے بھی زیادہ خطرناک ہوگی، عمران خان نےبھارت سےکہاتھاآپ ایک قدم اٹھائیں ہم2قدم اٹھائیں گے، ہم نے بھارت کاپائلٹ بھی واپس کیا۔

ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ مسئلہ کشمیرپرمتعددممالک کو اپناحمایت بناناپڑے گا، قوم سوشل میڈیاپرمقبوضہ وادی میں بھارتی مظالم کا پر چار کرے، افغان مسئلے کاحل پاکستان کےمفادمیں ہے، پاکستان نےافغان مہاجرین کی مہمان نوازی کی، پاکستان بہت ہی عظیم قوم بننے جا رہی ہے، افغانستان کےمعاملات میں بھارت کاکوئی رول بنتاہی نہیں ہے، بھارت نےہمیشہ افغان مسئلےمیں دخل اندازی کی، صدرٹرمپ کی وزیراعظم عمران خان سے اچھی ملاقات ہوئی۔

صدر عارف علوی نے کہا کہ پاکستان کاافغان امن میں انتہائی اہم کردارہے، پاکستان کے ہمسایہ ممالک سے تعلقات بہترہورہےہیں، ایران کے حوالے سے پاکستان کردباؤرہا، پاکستان کےایران کےساتھ اچھےتعلقات ہیں، نیب کرپشن کیخلاف آزادنہ تحقیقات کررہی ہے، چیئرمین نیب ہمارے پاس رپورٹ لیکر آئے تھے، پارلیمنٹ سیشن میں اپوزیشن ارکان سےبھی ملاقات کرتاہوں، جتناکھایاگیا،اس لحاظ سےزیادہ احتساب ہوناچاہیے۔

ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ ماضی میں بے انتہاکرپشن کی گئی، اپنی زندگی میں مجبوراًکئی جگہ رشوت دی ہے، یہاں توپورااحتساب ہوتا نظر نہیں آرہا، عمران خان بہت اعتمادسےکام کرتےہیں، عمران خان نے پاکستان کی تاریخ میں بہت اہم قدم اٹھایا، سندھ میں صوبائی حکومت اور لوکل گورنمنٹ ہمارےپاس نہیں، کراچی میں سمندرکےپانی کوصاف کرکےفراہم کیاجاسکتاہے، کراچی کی انڈسٹریز20فیصدپانی چراتی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ کچرے کے مسئلے پر وفاق وصوبائی حکومت کو ملکرکام کرناہوگا، کراچی میں پانی کے اخراج کے راستوں پرعمارتیں بن گئیں ہیں، پرانی والی ایم کیوایم کومقابلہ کیا، ایم کیوایم سے اتحاد ہونے کا کوئی امکان نہیں تھا، موجودہ ایم کیوایم سے مطمئن ہوں، پہلے والی متحدہ سے مقابلہ کیا،ہمیں دھمکیاں بھی دی گئیں، میرےگھرپرفائرنگ بھی ہوئی لیکن متحدہ اب بدل گئی ہے۔ وزیراعظم عمران خان کا قبلہ درست ہے اور ہماری مشاورت ہوتی رہتی ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay