مقبول موسیقارخواجہ خورشید انور کی 35 ویں برسی

[mashshare]

برصغیر کے عظیم موسیقار اور ہدایت کار خواجہ خورشید انور کی 35 ویں برسی آج منائی جارہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان کے مشہورو معروف موسیقارخواجہ خورشید انور میانوالی میں21 مارچ 1912 کو پیدا ہوئے۔

مہدی حسن کی آواز میں ’مجھ کو آواز دے تو کہاں ہے‘، نورجہاں کی آواز میں ’دل کا دیا جلایا‘، ’رم جہم رم جہم پڑے پھوار‘ اور ان جیسے ان گنت لافانی گیتوں کے خالق خورشید انور نے اپنے فنی سفر کا آغازسنہ 1939 میں آل انڈیا ریڈیو سے بطور پروڈیوسر کیا۔تاہم 1941 میں ریلیز ہونے والی فلم کڑمائی بمبئی (اب ممبئی) جس میں انہوں نے پہلی بار موسیقی ترتیب دی تھی گلوکارہ راجکماری کی آواز میں ’ماہی وے راتاں‘ سے ان کے موسیقی کے سفر کلی ابتداء ہوئی۔

خواجہ خورشید انور موسیقار کے علاوہ ایک کامیاب تمثیل نگار، شاعر اور ہدایتکار بھی تھے۔ بحیثیت ہدایتکار انہوں نے ہمراز، چنگاری اور گھونگٹ جیسی فلمیں بنائی اور اِن فلموں کی موسیقی بھی ترتیب دی۔

خواجہ صاحب نے اپنی پوری زندگی فن کے معاملے میں کبھی سمجھوتہ نہیں کیا۔ اُن کی موت پر احمد راہی نے کہا کہ عزت کی روٹی تو سب کھاتے ہیں لیکن عزت سے بھوکا رہنا صرف خورشید صاحب کو آتا تھا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay