3 دن سپریم کورٹ حکومت کی غلطیاں ٹھیک کرتی رہی، احسن اقبال

لاہور: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کا کہنا ہے کہ 3 دن سپریم کورٹ حکومت کی غلطیاں ٹھیک کرتی رہی۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما احسن اقبال کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ حکومت  تجربوں کی بنیاد پر ملک چلا رہی ہے اور حکومت نے 100 سے زائد سینئر افسران کا تبادلہ کیا۔ اتنے بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ حکومتی نااہلی کا ثبوت ہے۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ اصل قصور افسران کا نہیں، وزیراعظم کا ہے اور موجودہ حکومت کو ہاتھ پکڑ کر چلایا جارہا ہے۔ وزیراعظم نے اقتصادی اور قانونی ٹیم کو شاباش دی اور وزیراعظم نے مہنگائی میں اضافہ کرنے پر ٹیم کو شاباش دی؟

انکا کہنا تھا کہ 12 لاکھ سے زائد لوگ بےروزگار ہوچکے ہیں اور حکومت کو سمجھ نہیں آرہی ملک کیسے چلانا ہے۔ ڈرائیور اناڑی ہوگا تو پھر یہی حال ہوگا اور ہرناکامی کا الزام افسروں پر لگایا جاتا ہے۔

ن لیگ کے رہنما احسن اقبال کا کہنا تھا کہ ہائر ایجوکیشن ڈپارٹمنٹ کے 6 سے 7 سیکریٹری تبدیل کیے گئے اور 3 دن سپریم کورٹ حکومت کی غلطیاں ٹھیک کرتی رہی۔ 10 لاکھ سے زائد لوگ بےروزگار ہوچکے ہیں اور ہماری برآمدات میں 5 فیصد بھی اضافہ نہیں ہوا۔

احسن اقبال کا کہنا تھا کہ ترقی کی شرح 2 فیصد ہوگئی اور وزیراعظم مبارکباد دے رہے ہیں اور حکومت نے معیشت کو جنوبی ایشیا کی سست ترین معیشت بنادیا۔ سابق حکومت میں پاکستان کی کرنسی ایشیا میں مضبوط تھی اور آج پاکستان کا روپیہ کمزور ترین ہے۔

انکا کہنا تھا کہ بجلی کی قیمت میں اضافے سے بجلی چوری میں اضافہ ہوگا اور حکومت نے ایک سال میں چوتھی بار بجلی کی قیمت بڑھائی۔ بجلی کی قیمتوں میں اضافہ واپس لیا جائے۔

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنم احسن اقبال کا مزید کہنا تھا کہ آج سرکاری دفاتر میں بے انتہا کرپشن ہورہی ہے اور موجودہ حکومت کرپٹ ترین حکومت ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay