مذاکرات سے ہی افغانستان کا مسلئہ حل کیا جاسکتا ہے، شاہ محمود قریشی

ملتان: وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ مذاکرات سے ہی افغانستان کا مسلئہ حل کیا جاسکتا ہے۔

وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ افغان مسئلے پر پاکستان کے تعمیری کردار کو دنیا نے سراہا اور پاکستان افغانستان میں مکمل امن چاہتا ہے۔ زلمے خلیل زاد آج صبح دفترخارجہ تشریف لائے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان افغانستان کا تجارتی شراکت دار ہے اور پاکستان میں امن و استحکام کا واحد راستہ مذاکرات ہیں۔ مذاکرات سے ہی افغانستان کا مسئلہ حل کیا جاسکتا ہے اور افغان مسئلے کا فوجی حل نہیں ہے۔

انکا کہنا تھا کہ پاکستان امن سفر کی حمایت کرتا رہے گا اور افغانستان میں امن پاکستان سمیت پورے خطے کیلئے فائدہ مند ہے۔ لاہور واقعے پر شہری کرب میں مبتلا ہیں جب کہ وکلا اور ڈاکٹرز دونوں شعبے اہمیت کے حامل ہیں۔

وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ اس قسم کی رسہ کشی سےعام طبقہ متاثر ہوتا ہے اور ایسی قانون شکن کی حوصلہ افزائی نہیں ہونی چاہیے۔ سوئٹزرلینڈ کیساتھ ہونیوالے معاہدے کا ملک کو فائدہ ہوگا۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ افغانستان میں حالیہ صدارتی الیکشن کے نتائج کا اعلان جلد ہوجائے گا اور پاکستان نے افغان انتخاب میں مداخلت نہیں سہولیات فراہم کیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ماضی میں مولانا کی پیشگوئیاں درست ثابت نہیں ہوئی اور مولانا فضل الرحمان کا اپنا انداز بیان اور سوچ ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay