نارووال اسپورٹس سٹی پروزیراعظم کی ہدایت پرکام روکا گیا،احسن اقبال

اسپورٹس سٹی کیس کی احتساب عدالت میں سماعت ہوئی ضمانت کے بعد احسن اقبال کو احتساب عدالت کے جج محمد بشیر کے روبروپیش کیا گیا۔

جج محمد بشیر نے کہاکہ ملزم کی حاضری لگائی جائے، وکیل صفائی نے احسن اقبال کی حاضری کےعمل کی مخالفت کرتے ہوئے کہاکہاس کیس میں کیسے حاضری ہوسکتی ہے؟ کیس میں احسن اقبال ملزم نہیں ، ریفرنس آنے تک احسن اقبال کی حاضری نہیں لگ سکتی ۔

احسن اقبال نے اپنا بیان قلم بند کرواتے ہوئے نارووال اسپورٹس سٹی پروزیراعظم کی ہدایت پرکام روکا گیا،منصوبے کواجاڑنےوالوں کیخلاف ریفرنس دائر کیا جائے۔
رہنما مسلم لیگ نون احسن اقبال نے کہ کہاکہ اچھےکام کرنےکی سزادی جارہی ہے،18ماہ کےدوران نارووال اسپورٹس سٹی کواجاڑدیاگیا۔ہماری حاضریاں لگوائی جا رہی ہیں،مافیا آزاد پھررہاہے۔
جس پر جج نے احسن اقبال کو ہدایت کی کہ وہ جو کچھ کہنا چاہتے ہیں اپنا موقف تحریری طور پر وکیل کے ذریعے عدالت میں پیش کریں۔ مقدمے کی مزید سماعت 26 مارچ کو ہوگی۔

اسلام آباد کی احتساب عدالت نے ناروال اسپورٹس سٹی اسکینڈل کیس میں نیب کو ایک ماہ میں ریفرنس دائر کرنے کا حکم دے دیا نیب پراسیکیوٹر نے کیس میں پیشرفت رپورٹ اور ایف آئی اے کی جانب سے حاصل کردہ ریکارڈ جمع کرایا۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay