کورونا وائرس سے متاثر ہونے والی مشہورشخصیات

دنیا بھرمیں کوروناوائرس سے ہلاکتوں کی تعداد8ہزار944 س تجاوز کرگئی ہے جب کہ متاثرہ افرادکی تعداد2 لاکھ18ہزار740 ہے۔

جہاں کورونا وائرس نے دنیا کے نصف سے زائد ممالک کو اپنی لپیٹ میں لیا ہے، وہیں اس وبا ئی مرض سے کئی اہم سیاسی اورسماجی شخصیات بھی متاثر ہوئی ہیں ۔

کورونا وائرس( کووڈ19) کا شکار ہونے والےسیاستدان و ارکان پارلیمنٹ

ایران کی نائب صدر برائے خواتین اور عائلی امور معصومہ ابتکار کرونا وائرس کا شکار ہو ئیں ۔ سرکاری روزنامہ ’ایران‘ نے ٹویٹر پر یہ اطلاع تھی کہ نائب صدر معصومہ ابتکار کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں۔

ان کے علاوہ ایرانی پارلیمانی کی قومی سلامتی اور خارجہ امور کی کمیٹی کے چیئرمین مجتبیٰ ذوالنور نے ایک ویڈیو پیغام میں کورونا جیسے مہلک وائرس کا شکار ہونے کی اطلاع دی ۔
ایران کے دو اعلیٰ عہدے داروں ، پارلیمان کے رکن محمود صادقی اور نائب وزیر صحت ایرج حریرچی بھی اس مرض میں مبتلا ہوئے۔

اگرچہ ایرانی حکومت نے واضح طور پر سیاستدانوں اور حکومتی عہدیداروں کی تصدیق نہیں کی ہے، تاہم برطانوی اخبار دی گارجین نے 3 مارچ کو اپنی رپورٹ میں ایرانی عہدیداروں کا حوالہ دیتے ہوئے دعویٰ کیا کہ ایران کے کم سے کم 30 ارکان پارلیمینٹ کورونا میں مبتلا ہیں۔

، تاہم متعدد عالمی نشریاتی اداروں نے ایران کے نیم سرکاری خبر رساں اداروں کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ ایران کے متعدد سیاستدان کورونا میں مبتلا ہیں جب کہ ایک رکن پارلیمینٹ کے ہلاک ہونے کی خبریں بھی ہیں۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق 62 سالہ نائب برطانوی وزیر صحت 11 مارچ کو کورونا وائرس میں مبتلا ہوئیں۔ نیڈین ڈوریس نے وائرس کی تشخیص کے بعد خود کو اپنے گھر میں محدود کر لیا تھا۔انہوں  نے بتا یا تھاکہ  انکے ساتھ ان کی 84 سالہ والدہ رہتی ہیں میں مذکورہ  وائرس کی  علامات  ظاہر ہونا  شروع ہو  گئی ہیں ۔

نائب وزیر صحت نیڈین ڈوریس کے کورونا کے شکار ہونے کے ایک ہفتے بعد یعنی 16 مارچ کو  برطانوی رکن اسمبلی کیٹ اوسبورن نے بھی اپنی سوشل میڈیا پوسٹ کے ذریعے تصدیق کی کہ وہ بھی کورونا کا شکار بن گئیں۔

آسکر ایوارڈ یافتہ امریکی اداکار ٹام ہینکس اور ان کی اہلیہ ریٹا ولسن بھی کورونا وائرس کا شکار ہوئے ۔انہوں  نے فوٹو اینڈ ویڈیو شیئرنگ ایپ انسٹاگرام کے زریعے یہ بات اپنے مداحوں کو بتائی۔ انہوں  نے مرض کی  تفصیل  بتاتے ہوئے لکھا کہ انہیں اور اہلیہ کو آسٹریلیا میں جسم میں درد ،سردی اور بخار محسوس ہوا۔ جس پر ٹیسٹ کرانے پر ان دونوں میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے۔ جس کے بعد ٹام ہینکس نے اہلیہ سمیت خود کو احتیاطی تدابیر کے تحت محدود کرلیا ہے۔

تیرہ مارچ کو کینیڈین وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کی اہلیہ صوفی ٹروڈو میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ۔برطانوی میڈیا کے مطابق  ٹروڈو کی اہلیہ صوفی گریگوئر ٹروڈو کو برطانیہ سے وطن واپسی پر ہلکا بخار اور زکام کی شکایت ہوئی جس پر انہیں مشتبہ قرار دے کر کورونا وائرس کے ٹیسٹ کیے گئے۔ وزیراعظم جسٹن ٹروڈو اہلیہ میں کورونا کی  تصدیق  ہونے کے بعد گھرمیں مقیدہوگئے ۔

آسٹریلوی وزیر داخلہ پیٹر ڈٹن نے 13 مارچ کو تصدیق کی کہ وہ بھی کورونا وائرس کا شکار ہو گئے ہیں اور اب انہوں نے خود کو قرنطینہ کے حوالے کردیا، ان کے وائرس میں مبتلا ہونے کے بعد کئی اہم سیاسی شخصیات کے بھی وائرس کے شکار ہونے کا خیال ظاہر کیا گیا، تاہم اب  تک کسی اور سیاستدان میں وباء میں مبتلا ہونے کی تصدیق نہیں ہوئی تھی۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay