موٹروے زیادتی واقعہ: مرکزی ملزم کاڈی این اے میچ کرگیا،انشاللہ جلدگرفتاری ہوگی،شہبازگل

لاہور: وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل نے کہا ہے کہ موٹروے پر خاتوں کے ساتھ جنسی زیادتی کرنے والے ملزم کا ڈی این اے میچ کرگیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں معاون خصوصی شہباز گل نے کہا کہ وزیراعلیٰ عثمان بزدار، آئی جی پنجاب اور سی سی پی او لاہور سمیت پوری ٹیم کو مبارک ہو۔

وزیراعلیٰ عثمان بزدار رات 4 بجے تک اجلاس میں تھے۔ ملزم کی انشاللہ جلد گرفتاری بھی ہوگی۔ وزیراعلی ٰ پنجاب عثمان بزدار نےپورے کیس کی خود نگرانی کی۔ کام بولتا ہے الفاظ نہیں، ویلڈن وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار۔

دوسری جانب ذرائع کے مطابق  ملزم کا پروفائل ڈی این اے میچ کرگیا ہے۔ ملزم فورٹ عباس کا رہائشی ہے۔ کریمنل ڈیٹا بیس میں ملزم 2013 سے موجود ہے۔ ملزم کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں۔

قبل  ازیں آئی جی پنجاب انعام غنی نے کہا تھا کہ  خاتون زیادتی کیس میں ابھی کوئی ملزم گرفتارنہیں ہوا،املزمان کی گرفتاری سےمتعلق چلنےوالی خبریں غلط ہیں۔انہوں نے مزید کہاکہ کیس کی تفتیش کوخودمانیٹر کررہاہوں،کسی کامیابی پرمیڈیاکوخود آگاہ کریں گے،غیرتصدیق شدہ خبریں کیس پر اثرانداز ہوتی ہیں،سوشل میڈیاپرملزمان ور خاتون کی تصاویرغلط اورجعلی ہیں۔

مزید پڑھیے: خاتون زیادتی کیس میں ابھی کوئی ملزم گرفتارنہیں ہوا،آئی جی پنجاب

وزیراعلیٰ کی کمیٹی کو تحقیقات جلد مکمل کرنےکی ہدایت

وزیراعلیٰ کی کمیٹی کو تحقیقات جلد مکمل کرنےکی ہدایت جاری کرتے ہوئے کہاہےکہ لاہورسیالکوٹ موٹروےپرپنجاب پولیس ڈیوٹی دےگی،دلخراش واقعےمیں ملوث ملزمان نہیں بچ پائیں گے،ذاتی طورپرکیس پرپیشرفت کاجائزہ لے رہاہوں ۔

عثمان بزدار نے مزید  کہا ہےکہ  انصاف کی فراہمی تک چین سےنہیں بیٹھوں گا،پنجاب حکومت اورقوم متاثرہ خاندان کےساتھ ہے،اندوہناک واقعےپرہر پاکستانی کا دل زخمی ہے۔ ان کا کہنا ہےکہ  متاثرہ خاتون کوانصاف دلاناریاست کی ذمہ داری ہے،حکومت اس ذمہ داری کوفرض سمجھ کرنبھائےگی۔

دوسری جانب موٹروے پر زیادتی کا شکار خاتون کی ابتدائی میڈیکل رپورٹ سامنے آگئی تھی۔ میڈیکل رپورٹ میں خاتون کے ساتھ زیادتی ثابت ہوگئی ہے۔

ذرائع کے مطابق متاثرہ خاتون کا میڈیکل کوٹ خواجہ سعید اسپتال سے کرایا گیا۔ 7 مشتبہ افراد کا ڈی این اے میچنگ کروا لیا گیا۔ پولیس نے کرول گاؤں کے سینتالیس مردوں کے ڈی این اے سیمپل بھی لے لیے ہیں۔

دوسری طرف پولیس نے جائے وقوعہ کے اطراف میں رہائشیوں سمیت 70 سے زائد جرائم یافتہ افراد کو شارٹ لسٹ بھی کر لیا گیا ہے۔ اس سے قبل پولیس نے کہا تھا کہ متاثرہ خاتون کی گھڑی اورانگھوٹھی مل گئی ہے اور 15 مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔

مزید پڑھیے : موٹروے زیادتی کیس:متاثرہ خاتون کی گھڑی اور انگھوٹھی مل گئی

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay