شہباز شریف کو کسی جرم پر نہیں بھائی کے ساتھ کھڑے ہونے پر گرفتار کیا گیا، مریم نواز

لاہور: پاکستان مسلم لیگ کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہےکہ شہبازشریف نےسرتوڑکوششوں کےباوجودبھائی کاساتھ نہیں چھوڑا، شہبازشریف کواپنےبڑےبھائی کی وفاداری کی سزاملی۔

اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی گرفتاری کے بعد مسلم لیگ ن کےرہنماؤں نے لاہور میں پریس کانفرنس کی۔پاکستان مسلم لیگ کی نائب صدر مریم نواز نے پریس کانفرنس میں کہا کہ ملک میں پہلی باراتنی مہنگائی ہوئی ہے،کفرکی حکومت چل سکتی ہےظلم کی حکومت نہیں چل سکتی،ملک میں پہلی باراپوزیشن کاکریک ڈاؤن کیاگیاہے۔

انہوں نے مزید کہاکہ ملک میں ون پارٹی کی سازش ہورہی ہے،موجودہ دورحکومت میں اپوزیشن لیڈرکو2بارگرفتارکیاگیا،مجھےگرفتارکیاگیالیکن میرےخلاف ریفرنس دائرنہیں کیاگیا،ڈیڑھ سال ہوگیامیرےخلاف ریفرنس دائرنہیں کیاگیا۔

ان کا کہنا تھاکہ شہبازشریف کواپنےبڑےبھائی کی وفاداری کی سزاملی،شہبازشریف نےسرتوڑکوششوں کےباوجودبھائی کاساتھ نہیں چھوڑا،پہلی بارہرگناہ کرنےکےبعدبھی حکومت بری الذمہ ہے۔

مریم نواز نے کہاکہ شہبازشریف کوعدالتوں کےچکرلگوائےگئے،مجھ سےنیب میں پوچھاگیاتھاکہ گھرمیں کیاکھاناکھاتےہیں،شہبازشریف کی اہلیہ،بیٹوں کواشتہاری بنادیاگیا،حمزہ شہبازپرالزام ثابت نہیں ہواپھربھی جیل میں رکھاہواہے،اوچھےہتھکنڈوں کےباوجودشہبازشریف اپنےبھائی کےساتھ کھڑےرہے۔ شہبازشریف نےکہاپکڑناہےتوپکڑلیں،اےپی سی فیصلےپرمکمل عمل ہوگا۔

انہوں نے مزید کہا کہ نیب کوبی آرٹی،بلین ٹری سونامی،عمران خان کاگھرنظرنہیں آتا،جہانگیرترین کوبیرون ملک بھیج دیاگیا،نیب کووزراکی کرپشن نظرآتی ہےنہ بلین ٹری کیس،نیب کوبی آرٹی بسوں میں لگنےوالی آگ بھی نظرنہیں آتی۔

انہوں نے کہاکہ کہاجاتاہےن لیگ اداروں کےخلاف بات کرتی ہے،کبھی مولانافضل الرحمان کونوٹس بھیج دیاجاتاہے، (ن)اور(ش) پوری طرح متحدہیں، (ن)سے(ش)کبھی نہیں نکلےگی،ن میں سےش نکالنےوالوں کی اپنی چیخیں نکل گئیں۔

مریم نواز نے کہاکہ شہبازشریف کاتعلق کاروباری گھرانےسےہےجو1930سےکاروبارکررہاہے،عدلیہ نےبھی کہانیب پولیٹیکل انجینئرنگ کرنےوالاادارہ ہے،میڈیا،عدلیہ پردباؤڈالنےسےمتنازع کوئی چیزنہیں۔

مریم نوازنےشہبازشریف کومفاہمتی سیاستدان قراردیتے ہوئے کہا کہ شہبازشریف کی ذاتی سوچ ہےکہ مفاہمتی سیاست شایدبہترہے، شہبازشریف ہمارےصدراورنوازشریف قائدہیں اوررہیں گے۔ایسےشخص کومسلط کیاگیاجسےحکومت چلانےکاتجربہ نہیں،عمران خان سےزیادہ اداروں کوبدنام کسی نےنہیں کیا،عمران خان نےملک کوآج دوراہےپرلاکھڑاکردیا۔

شہبازشریف کوگرفتارکریں یامجھےتحریک اب رکنےوالی نہیں،عمران خان نےملک کواندھیروں میں جھونک دیا،کہتےہیں آج استعفےدیں ہم الیکشن کرادیں گے،اتنی زیادہ سیٹوں پرالیکشن کراناآسان نہیں،گلگت بلتستان الیکشن کوانجینئرڈکیاجارہاہے،ن لیگ گلگت بلتستان میں آپ کےلیےکھلامیدان نہیں چھوڑےگی۔

آج پاکستان کی جمہوریت کاسیاہ دن ہے،احسن اقبال

آج پاکستان کی جمہوریت کاسیاہ دن ہے،گلگت بلتستان میں مسلم لیگ ن کی کامیابی کےروشن امکان ہیں،ن لیگ نےگلگت بلتستان میں ترقیاتی کام کیے،ہماری حکومت میں گلگت بلتستان میں امن قائم ہوا۔

احسن اقبال  کا کہنا تھاکہ وفاقی حکومت ن لیگ کوانتخابی مہم چلانےسےروک رہی ہے،گلگت بلتستان وہ خطہ ہےجہاں سےسی پیک روٹ گزرتاہے،گلگت بلتستان میں ن لیگ اپنےمینڈیٹ کی حفاظت کرےگی۔

انہوں نے کہاکہ آج شہبازشریف کی گرفتاری ایک المیہ ہے،شہبازشریف نےپنجاب میں مفت علاج کی سہولیات فراہم کیں،شہبازشریف کےساتھ جوکیاگیاوہ ملکی تاریخ پردھبہ ہے،پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کااجلاس طلب کرلیاگیاہے،ہم شہبازشریف کی گرفتاری پرملک بھرمیں احتجاج کریں گے۔

یاد رہے کہ  آج  آمدن سے زائد اثاثہ جات اور منی لانڈرنگ کیس میں مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی عبوری درخواست ضمانت مسترد ہونے پر نیب نےانہیں گرفتارکرلیا۔

مزید پڑھیے :  عبوری ضمانت خارج ، شہباز شریف لاہور ہائیکورٹ سےگرفتار

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay