حکومت چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کو کامیابی سے آگے بڑھانے کیلئے پرعزم

سینیٹ کو آج بتایاگیا کہ ایسے کوئی مخصوص راستے نہیں ہیں جو پاکستان کے سرحدی علاقوں میں منشیات کی اسمگلنگ کیلئے استعمال ہوتے ہوں ۔

گزشتہ  روز  اسلام آباد میں وقفہ سوالات کے دوران ایک سوال کے جواب میں پارلیمانی امور کے وزیرمملکت علی محمد خان نے کہاکہ پہاڑی علاقے منشیات کا غیرقانونی کاروبار کرنے والے عناصر کو کم استعمال ہونے والے راستوں کے ذریعے متعدد مواقع فراہم کرتے ہیں۔

انہوں نے کہاکہ ملک میں منشیات کی سمگلنگ کو روکنے کیلئے سترہ وفاقی اور چودہ صوبائی ادارے کام کررہے ہیں انہوں نے کہاکہ انسداد منشیات فورس کے خفیہ نیٹ ورک کو منشیات اسمگلروں کی تلاش اورانھیں پکڑنے کیلئے کئی شہروں کے اندر توسیع دی گئی ہے ۔

علی محمد خان نے کہاکہ ایف ایم ریڈیو 101 پر انسداد منشیات فورس کیلئے سہ پہر تین سے چار بجے تک کا وقت مختص کہاگیا ہے جہاں عوام کو منشیات اوراس کے سنگین اثرات کے بارے میں آگاہی دی جارہی ہے ۔
پارلیمانی امور کے وزیر مملکت علی محمد خان نے پاکستان پیپلزپارٹی کے پارلیمانی لیڈر رضا ربانی کے نکات کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ حکومت چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبے کو کامیابی سے آگے لے جانے کیلئے پرعزم ہے ۔

قائد ایوان وسیم شہزاد نے ایوان میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی دانشمندانہ قیادت میں پاکستان اقتصادی استحکام کی جانب بڑھ رہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ آج ملکی برآمدات اور ترسیلات زر میں اضافہ دیکھا جارہا ہے ۔
ایوان کا اجلاس اب پیر کی سہ پہر تین بجے ہوگا ۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay