حمزہ شہباز نے سپریم کورٹ سے درخواست ضمانت واپس لے لی

اسلام آباد : سپریم کورٹ آف پاکستان نے مسلم لیگ نون کے رہنما اور پنجاب اسمبلی میں قائدِ حزبِ اختلاف حمزہ شہباز کی درخواستِ ضمانت خارج کر دی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کے جسٹس مشیر عالم کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے سماعت کرتے ہوئے حمزہ شہباز کی درخواستِ ضمانت واپس لینے پر خارج کی۔

حمزہ شہباز کے وکیل امجد پرویز نے معزز عدلات سے کہا کہ ہم ہارڈشپ پر ضمانت مانگ رہےہیں جس پر بنیادپرجسٹس سردارطارق نے ریمارکس دیئے کہ آپ کیس میرٹ پر لڑناچاہتےیاہارڈشپ کی بنیاد پر؟

وکیل حمزہ شہباز کا یہ بھی کہنا تھا کہ ایک سال7ماہ سےمیراموکل جیل میں ہے۔ اس پر جسٹس سردارطارق نے کہا کہ ہائیکورٹ میں ہارڈشپ کاذکرہی نہیں کیاگیا تو سپریم کورٹ کیسےہارڈشپ کامسئلہ دیکھ سکتی ہے؟ اس پر ان کے وکیل کا کہنا تھا کہ اس وقت حالات اورتھےگرفتاری کوایک سال سےکم عرصہ ہواتھا۔

واضح رہے کہ حمزہ شہبازنےمنی لانڈرنگ کیس میں درخواست ضمانت دائرکی تھی جو انہوں نے واپس لے لی ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay