فیٹف ایکشن پلان کے 27 نکات میں سے 24 مکمل، پاکستان کو بلیک لسٹ نہیں کیا جائے گا، حماد اظہر

اسلام آباد : حماد اظہر نے کہا ہے کہ ایف اے ٹی ایف کے 27 ایکشن پلان نکات میں سے 24 مکمل کرلیے گئے ہیں۔ اس لئے بلیک لسٹ ہونا اب پاکستان کے لیے آپشن نہیں رہا ہے۔ 3 اہداف رہ گئے ہیں جسے کوشش ہے جون میں مکمل کرلیں۔

وفاقی وزیر صنعت و تجارت حماد اظہر کا پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ایف اے ٹی ایف کے ایکشن پلان میں ہم جنوری 2018 کو نامزد ہوئے تھے۔ جس کا مقصد پاکستان کو بلیک لسٹ میں جانے سے روکنا تھا۔ ایف اے ٹی ایف ممالک کا کہنا ہے کہ اب بلیک لسٹنگ پاکستان کا مسئلہ نہیں رہا۔ پاکستان کا بلیک لسٹ میں جانا معیشت کے لیے نقصان دہ ہوسکتا تھا۔

حماد اظہر نے اسلام آباد میں میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ ایف اے ٹی ایف خود کہہ رہا ہے 90 فیصد کام مکمل ہوچکا ہے۔ یہ دنیا کا سب سے مشکل ایکشن پلان تھا۔ جس کے 27 نکات  پر عمل کرنا ہمارا ہدف ہے۔ کرونا کے باوجود ٹارگٹ کو ہم نے بڑی حد تک پورا کیا ہے۔ جبکہ کرونا آنے پر ہمارے پاس آپشن تھا کہ ہم رپورٹنگ نہ کرتے لیکن ہم نے کی ہے۔ کیونکہ حکومت ملی تو اہم ٹاسک تھا پاکستان کو بلیک لسٹ ہونے سے بچایا جائے۔

وفاقی وزیر نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ ایف اے ٹی ایف کے 27 ایکشن پلان نکات میں سے 24 مکمل کرلیے گئے ہیں۔ اس لئے بلیک لسٹ ہونا اب پاکستان کے لیے آپشن نہیں رہا ہے۔ 3 اہداف رہ گئے ہیں جسے کوشش ہے جون میں مکمل کرلیں۔ فیٹف کو بھارت نے مذموم عزائم کے لیے استعمال کرنے کی کوشش کی لیکن پاکستان نے مثالی کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay