وزارت داخلہ نے تحریک لبیک پاکستان کو کالعدم قرار دے دیا

وزارت داخلہ نے تحریک لبیک پاکستان کو کو کالعدم قرار دے دیا۔ وزارت داخلہ نے تحریک لبیک پاکستان پر پابندی کا کا نوٹیفکیشن جاری کردیا۔

انسداد دہشتگردی ایکٹ 1997 کے تحت تحریک لبیک پاکستان کو کالعدم قرار دیا گیا۔ نوٹی فکیشن کے مطابق تحریک لبیک پاکستان ملک میں دہشت گردی اور دوسرے گھناؤنے جرائم میں ملوث ہے۔

قبل ازیں اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ وزیراعظم نے مجھے اور نورالحق قادری کو ٹی ایل پی سے متعلق تفصیلی ہدایات دیں۔وزیرداخلہ شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کو ختم کرنے کے لیے کل سپریم کورٹ سے بھی رجوع کررہے ہیں۔ شیخ رشید نے کہا کہ پولیس اہلکاروں نے جانوں کا نذرانہ دے کر امن کو یقینی بنایا، ہم نے پوری کوشش کی بات چیت سے مسئلے حل ہوں۔

وزیر داخلہ نے کہا کہ ان کے ارادے خوفناک تھے وہ اپنے ایجنڈے سے پیچھے ہٹنا نہیں چاہتے تھے، ٹی ایل پی پر پابندی کےنوٹفکیشن کے لیے ضروری کارروائی جاری ہے۔ شیخ رشید نے کہا کہ 580 پولیس والے زخمی ہیں، سب کو سلام پیش کرتا ہوں، پنجاب پولیس اور رینجرز کو سلام پیش کرتے ہیں۔

قبل  ازیں اسلام آباد میں وزیراعظم کی زیر صدارت حکومتی رہنماؤں کے اجلاس میں کہا ہے کہ تحریک لبیک کوکالعدم قراردیکرمکمل پابندی عائدکی جارہی ہے، مسلح جتھوں کوملک کاامن خراب کرنےکی اجازت نہیں دےسکتے۔

تحریک لبیک پرپابندی کے فیصلے پراعتماد میں لیا گیا، وزیراعظم کی پولیس اورقانون نافذکرنےوالےاداروں کی قربانیوں کی تعریف، وزیرداخلہ شیخ رشید نےملکی امن وامان کی صورتحال  سےآگاہ کیا، تحریک لبیک کوکالعدم قراردیکرمکمل پابندی عائدکی جارہی ہے۔

وزیراعظم نے کہا ہے کہ مسلح جتھوں کوملک کاامن خراب کرنےکی اجازت نہیں دےسکتے، پولیس وسیکیورٹی اداروں نےجس جذبےسےامن قائم کیاقابل تحسین ہے، مطالبات کرناہرکسی کاحق ہے،پرتشدداحتجاج کی اجازت نہیں دی جاسکتی، پولیس اورسیکیورٹی اداروں پرفخرہے،پرتشدداحتجاج کرکےریاست کودباؤمیں نہیں لایاجاسکتا۔

وزیراعظم نے مزید کہا کہ وزیرداخلہ اورنورالحق قادری کوصورتحال پرقوم کواعتماد میں لینےکی ہدایت، پریس کانفرنس کریں اورتمام صورتحال سےآگاہ کریں۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay