ٹیکس وصولی کو70 کھرب روپے تک بڑھانے کا عزم کر رکھا ہے،وزیر خزانہ

وزیرخزانہ شوکت ترین نے کہا ہے کہ حکومت 2023ء میں اپنی آئینی مدت کے اختتام تک ٹیکس وصولی کو بڑھا کر ستر کھرب روپے تک پہنچانے کیلئے پرعزم ہے۔

گزشتہ  روزاسلام آباد میں وزیرتوانائی حما داظہر اور وزیراقتصادی امور خسرو بختیار کے ہمراہ ذرائع ابلاغ سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ہم نے ہرسال محصولات میں بیس فیصد اضافے کی منصوبہ بندی کی ہے ۔وزیرخزانہ نے توقع ظاہر کی کہ سینتالیس سو ارب روپے تک کے محصولات کی وصولی کا ہدف حاصل ہوجائے گا جبکہ آئندہ سال یہ ہدف پچاس کھرب اسی ارب روپے ہوگا ۔

انہوں نے کہاکہ کورونا وباء کے باوجود حکومت اقتصادی شرح نمو کو چار فیصد کے قریب لانے میں کامیاب رہی۔انہوں نے کہاکہ آئندہ مالی سال کے دوران شرح نمو پانچ فیصد تک رہے گی ۔وزیرخزانہ نے کہاکہ محصولات کی وصولی میں اضافے کیلئے نئے ٹیکس لگانے پر یقین نہیں رکھتی اور زیادہ سے زیادہ محصولات کی وصولی کے مقاصد ٹیکس کا دائرہ کار بڑھانے کے ذریعے حاصل کیئے جائیںگے۔

شوکت ترین نے کہاکہ ہم نے سرکاری شعبے کے ترقیاتی پروگرام میں اڑتیس فیصد اضافے کا فیصلہ کیا ہے ۔انہوں نے کہاکہ ہم خسارے میں جانے والے سرکاری اداروں کی تعمیر نو اور نجکاری کے عمل کو شروع کرنے پربھی کام کررہے ہیں۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay