پنجاب اسمبلی کے خصوصی اجلاس میں صوبے کا 2 ہزار 653 ارب روپے کا بجٹ پیش

پنجاب اسمبلی کے خصوصی اجلاس میں صوبے کا 2 ہزار 653 ارب روپے کا بجٹ پیش کر دیا گیا ہے۔ 

پنجاب اسمبلی کے خصوصی اجلاس میں صوبے کا 2 ہزار 653 ارب روپے کا بجٹ پیش کر دیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر خزانہ ہاشم جواں بخت  پیش کیا۔ حکومت نے عوام کو ریلیف دیتے ہوئے کوئی نیا ٹیکس نہ لگانے جبکہ سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافے کا فیصلہ کیا ہے۔ ترقیاتی پروگرام کیلئے 560 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔

پنجاب کے وزیرخزانہ ہاشم جواں بخت نے لاہور میں صوبائی اسمبلی میں بجٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے بجٹ کے مقابلے میں اگلے سال کے بجٹ کے حجم میں اٹھارہ فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ این ایف سی ایوارڈ کے تحت وفاقی حکومت پنجاب کو ایک ہزار چھ سو چوراسی ارب روپے کے فنڈز فراہم کرے گی۔انہوں نے کہا کہ بجٹ میں صوبائی محصولات کا ہدف چارسو پانچ ارب روپے رکھا گیا ہے۔صوبائی وزیر خزانہ نے کہا کہ بجٹ میں ایک ہزار چار سو اٹھائیس ارب روپے کے موجودہ اخراجات کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

پنجاب کے بجٹ میں صنعتوں، زراعت، لائیوسٹاک، سیاحت اور جنگلات سمیت ڈھانچہ جاتی ترقی، خصوصی پروگراموں اور پیداواری شعبوں کیلئے 560 ارب روپے کی ریکارڈ رقم مختص کی گئی ہے۔

Junior - Taleem Aam Karaingay - Juniors ko Parhaingay