موبائل صارفین کے لیے خوشخبری، جتنا لوڈ کروائیں اتنا ہی بیلنس پائیں

موبائل کمپنیوں نے موبائل کارڈ اور ٹیکس کاٹنے کے حوالے سے سپریم کورٹ کا حتمی فیصلہ آنے تک ٹیکس نہ کاٹنے کا فیصلہ کرلیا۔ جس کے بعد صارفین جتنا لوڈ کروائیں گے اتنا ہی بیلنس پائیں گے۔

اٹارنی جنرل کی سربراہی میں ایف بی آر اور ٹیلی کام کمپنیوں کا اجلاس ہوا۔ جس میں موبائل کمپنیوں نے سپریم کورٹ کے حتمی فیصلے تک ٹیکس نہ کاٹنے کا فیصلہ کرلیا۔

نمائندہ نیوز ون کے مطابق ذرائع نے بتایا ہے کہ عدالتی فیصلہ آنے تک صارفین جتنا بیلنس ریچارج کرائیں گے اتنا ہی بیلنس پائیں گے۔

سپریم کورٹ کا حتمی حکم آنے کے بعد 100 روپے پر 88 روپے 90 پیسے صارفین کا بیلنس ملے گا جبکہ 50 روپے کے لوڈ پر 45 روپے 90 پیسے صارفین کو موصول ہوں گے۔

ٹیکس کٹوتی کے معاملے پر ٹیلی کام کمپنیاں بھی سپریم کورٹ میں جوابدہ ہوں گی۔

واضح رہے کہ ٹیلی کام کمپنیوں نے 13 جون کو عبوری طور پر 15 روز کے لیے موبائل کارڈ پر ٹیکس نہ کاٹنے کا فیصلہ کیا تھا۔ سپریم کورٹ کی جانب سے از خود نوٹس پرموبائل کارڈ پر ٹیکس وصولی روک دی گئی تھی۔