دانیال عزیز کو تھپڑ مارنے کا معاملہ: نعیم الحق کا اپنے بیان سے یوٹرن

Naeem-ul-Haq

کراچی: پاکستان تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق نے پہلے اپنےبیان میں کہا کہ دانیال عزیز کو تھپڑ مارنے پر عمران خان نے سراہا لیکن پھر یوٹرن دوسرا بیان جاری کیا کہ تحریک انصاف کے بانی نے تھپڑمارنے کی تعریف نہیں کی بلکہ میرے جواب دینے کے طریقے کو سراہا۔

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق کا اپنے ویڈیو پیغام میں کہنا تھا کہ اس شخص نے جب عمران خان کی ذات پر حملے کیے اور کرتا رہا  جھوٹ بولتا رہا اور پھر جب اس نے مجھے چور کہا وہ ایک قدرتی عمل تھا جس پر میں نے اسے تھپڑ مارا عمران خان صاحب نے اس کی تعریف کی کیونکہ یہ بہت عرصے سے زہر گھول رہا تھا اور تحریک انصاف میں آنے والے حمایتوں نے بھی اس عمل کو سراہا۔

رہنما پی ٹی آئی نعیم الحق کا اپنا بیان بدلتے ہوئے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹ پر اپنے پیغام میں کہا کہ عمران خان نے تھپڑ مارنے کی تعریف نہیں کی ہے جبکہ عمران خان تشدد کیخلاف ہیں اور عمران خان نے میرے جواب دینے کے طریقے کو سراہا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما نعیم الحق نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما اور وزیر مملکت برائے نجکاری دانیال عزیز کے منہ پر تھپڑ دے مارا تھا۔

نجی ٹی وی کے پروگرام میں تلخ جملوں کے تبادلے کے دوران ایک دوسرے سے الجھ پڑے اور پی ٹی آئی کے رہنما نعیم الحق نے ن لیگی رہنما دانیال عزیز کو تھپڑ دے مارا۔  دانیال عزیز نے نعیم الحق کو شو کے دوران چور کہا تھا جو ان سے برداشت نہیں ہوا تھا اور انہوں نے دانیال عزیز کے منہ پر تھپڑ رسید کردی۔ پروگرام کے میزبان نے دونوں رہنماؤں کے درمیان بیچ بچاؤ کروایا۔