آئی ایس آئی ہماری پہلی دفاعی لائن ہے، وزیراعظم عمران خان

Imran-khan

 اسلام آباد : وزیرا عظم عمران خان نے پاکستان کی خفیہ ایجنسی ‘انٹرسروس انٹیلیجنس ‘ کی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے ٓئی ایس آئی کو پہلی دفاعی لائن قرار دیا ہے۔

 پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ( آئی ایس پی آر) کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے پاکستان کی خفیہ ایجنسی آئی آیس آئی کے ہیڈکوارٹر کا دورہ کیا جس کا دورانیہ 8 گھنٹے طویل تھا ۔

آئی ایس آئی ہیڈ کوارٹر میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ اور ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹینینٹ جنرل نوید مختار نے وزیراعظم عمران خان کا استقبال کیا۔

 اس موقع پروزیراعظم عمران خان کو اسٹریٹجک انٹیلی جنس اور قومی سلامتی کے معاملات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے قومی سلامتی کے لیے خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی کی خدمات کو سراہا اور کہا کہ آئی ایس آئی پاکستان کی پہلی دفاعی لائن ہے اور دنیا کی بہترین انٹیلی جنس ایجنسی ہے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ پاکستان کی حکومت، عوام اور افواج انٹیلی جنس ایجنسیز کےساتھ ہیں۔ قومی سلامتی اور ملک کے دفاع کی خاطر ہماری ایجنسیز نے بے شمار اور لازوال قربانیاں دیں ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام ان اداروں کی بے مثال قربانیوں کو تسلیم کرتی ہے اور ہر مشکل وقت میں ان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑی ہے۔ ترجمان پاک فوج کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے یاد گار شہدا پر بھی حاضری دی اور پھول چڑھائے۔

آئی ایس آئی کے ہیڈکوارٹر کے دورے پر وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور وزیراطلاعات فواد چوہدری بھی موجود تھے۔