لبیک اللھم لبیک ، مناسک حج کا آغاز ہوگیا

مکہ مکرمہ : سعودی عرب میں مناسک حج کا آغاز ہوگیا، لاکھوں عازمین حج منیٰ روانگی شروع ہوگئی، جہاں دنیا کی سب سے بڑی خیمہ بستی آباد ہوگی ۔

اس سال 20لاکھ سے زائد عازمین فریضہ حج اداکریں گے جن میں ایک لاکھ 84ہزار پاکستانی عازمین حج میں شامل ہیں۔

لبیک اللھم لبیک ، مناسک حج کا آغاز ہوگیا، لاکھوں عازمین منیٰ پہنچ گئے۔ جہاں دنیا کی سب سے بڑی خیمہ بستی قائم ہوگئی۔ عازمین منیٰ میں ہی رات قیام کرینگے، قیام کے دوران ظہر، عصر، مغرب عشاء اور فجر کی نمازیں ادا کریں گے۔

عازمین 9 ذی الحج کو نماز فجر کے بعد منیٰ سے میدان عرفات روانہ ہوں گے،جہاں حج کا رکن اعظم وقوف عرفہ ادا کیا جائے گا، عازمین خطبہ حج سنیں گے پھر امام حج کی اقتدار میں نماز ظہر اور عصرقصر کے ساتھ ادا کریں گے۔اس سال مسجد نبوی کے امام شیخ حسن بن عبدالعزیز آل الشیخ خطبہ حج دیں گے۔

عازمین غروب آفتاب کے بعد مزدلفہ پہنچیں گے جہاں وہ نمازِ مغرب اور عشاء ایک ساتھ پڑھیں گے ۔  رات بھر مزدلفہ میں کھلے میدان اور پہاڑوں پر قیام ہوگا اور رمی جمرات کے لیے کنکریاں چنیں گے ۔اور نماز فجر بھی مزدلفہ میں ہی ادا کریں گے۔

دس ذی الحج کو طلوع آفتاب کے بعد حجاج کرام مزدلفہ سے منیٰ کی جانب جائیں گے ۔ جہاں سب سے بڑے شیطان کو کنکریاں ماری جائیں گی۔ اور رمی جمرات کے بعد حجاج کرام قربانی کریں۔ قربانی کرنے کے بعد سر منڈوا کر احرام کھول دیں گے  اور طواف زیارت کریں گے۔

پاکستان کی سرکاری اسکیم کے تحت ایک لاکھ 7 ہزار 351 عازمین حج مکہ مکرمہ پہنچے اور نجی اسکیم کے تحت 76 ہزار 619 عازمینِ حج سعودی عرب پہنچے ہیں جبکہ مقامی اور پاکستان سے آئے ہوئے معاونین کی تعداد 2 ہزار 840 ہے۔

اس سال حج کے موقع پر حجاج کرام کیلئے جدید ایپس متعارف کرائی گئی ہیں جن سے انہیں مقدس مقامات کے بارے میں معلومات حاصل کرنے میں مدد ملے گی۔