پاک بحریہ نے یومِ پاکستان روایتی جوش و جذبے کے ساتھ منایا

اسلام آباد :  پاک بحریہ نے یومِ پاکستان روایتی جوش و جذبے کے ساتھ منایا ۔ یہ دن پاکستانی قوم کو ان عظیم اورلافانی قربانیوں کی یاد دہانی کے لیے منایا جاتا ہے جن کی بنیاد پر پاکستان کا قیام عمل میں آیا۔ اس دن مسلمانانِ بر صغیر نے ایک علیحدہ وطن کے مطالبے کی قرارداد متفقہ طور پرمنظور کی تاکہ وہ برِ صغیر میں مسلمانوں کے حقوق کا تحفظ کرسکیں۔

یومِ پاکستان کا آغاز توپوں کی سلامی اور مساجد میں وطن عزیز کی سا لمیت اور استحکام کے لیے خصوصی دعاؤں کے ساتھ ہوا۔ پاک بحریہ کے تمام جہازوں اور یونٹس پر چراغاں کیا گیا اور کمانڈنگ آفیسرزنے افسران و جوانوں کے خصوصی اجتماعات سے خطاب کے دوران اس دن کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔  یوم پاکستان کی سب سے اہم تقریب مسلح افواج کی مشترکہ پریڈ تھی جو اسلام آباد پریڈ گراؤنڈمیں منعقد ہوئی۔پریڈ کے ڈپٹی کمانڈر پاک بحریہ کے کیپٹن سید عاطف شاہ تھے جبکہ سفید مصفاروایتی وردی میں ملبوس پاک بحریہ کا چاق و چوبند دستہ بھی اس تقریب کا اہم حصہ تھا جس کی قیادت کمانڈرسید ثقلین کاظمی کر رہے تھے ۔

پاک بحریہ کی لیڈی آفیسرزو میڈیکل ٹیکنیشنز، اسپیشل سروس گروپ (نیوی) اور پاک بحریہ کا میوزیکل بینڈمسلح افواج کے مشترکہ دستوں میں شامل تھے۔ علاوہ ازیں ، پاکستان نیوی کے ائیر کرافٹP3Cاورین ، Z9ECاور سی کنگ ہیلی کاپٹرز نے بھی اس پروقارپریڈ کے دوران فلائی پاسٹ میں حصہ لیا۔

پاکستان نیوی کے کیپٹن شہزاد حامد P3Cفارمیشن فلائی پاسٹ کی قیادت کررہے تھے۔ P3Cلانگ رینج میری ٹائم پٹرول ائیر کرافٹ ہے جسے عرفِ عام میں ’فلائنگ ڈسٹرائیر ز ‘ بھی کہا جاتا ہے، یہ ہوائی جہاز اینٹی سرفیس میزائلز، اینٹی سب میرین ٹارپیڈوز، ڈیپتھ چارجز، بموں اور بارودی سرنگوں سے لیس ہیں۔

پاک بحریہ کے Z9ECہیلی کاپٹرز جنہیں ’اسٹنگرے‘ کے نام سے جانا جاتا ہے، انتہائی جدید ریڈار ، ڈپنگ سونار ، ٹارپیڈوز اور ڈیپتھ چارجز سے لیس ہیں۔ ان ہیلی کاپٹرز کو دشمن کی آبدوزوں کو نشانہ بنانے کے لیے خصوصی طور پر ڈیزائن کیا گیا ہے۔ پاک بحریہ کے کیپٹن زاہد فاروق نے زیڈ نائن ای سی فارمیشن کی قیادت کی۔ سی کنگ ہیلی کاپٹرز جنہیں عرفِ عام میں ’شارکس‘ بھی کہا جاتا ہے ، کا تعلق پاک بحریہ کے 111اسکواڈرن سے ہے۔ یہ جدید ترین ہیلی کاپٹرز ، میری ٹائم نگرانی کے علاوہ اینٹی سب میرین وارفیئر اور اینٹی سرفیس آپریشنز انجام دینے کی بھر پور صلاحیت رکھتے ہیں۔ سی کنگ ہیلی کاپٹرز کی فارمیشن کی قیادت کیپٹن نعمان بشیر عثمانی نے کی۔

پاک بحریہ کی سی ایگل ٹیم جس کی قیادت پاک بحریہ کے کیپٹن عمران رانا کر رہے تھے اور اسپیشل سروس گروپ (نیوی) بھی مسلح افواج کی اسکائی ڈائیونگ ٹیم کا حصہ تھی۔ اس ٹیم نے فری فال جمپنگ کی مختلف تکنیک کا مظاہرہ کیا جس میں پیچیدہ مہارتیں اور مکمل درستگی کے ساتھ مقررہ مقام پر اُترنا شامل تھا۔

یومِ پاکستان کے موقع پر پاک بحریہ میں دیگر کئی تقریبات کا انعقاد بھی کیا گیا جن میں پاک بحریہ کی یونٹس اور اسٹبلشمنٹس میں پرچم کشائی ، قومی ترانے اور پاک بحریہ کے تعلیمی اداروں کے طلباء و طالبات کی طرف سے ملی نغموں پر مشتمل تقریبات شامل تھیں۔

کراچی میں خصوصی طور پر پاکستان ڈے فن فیئر کا انعقاد کیا گیا جس میں بچوں اور بڑوں کے لئے مختلف سرگرمیوں کا اہتمام کرکے یومِ پاکستان کی اہمیت کو اُجاگرکیا گیا۔پاک بحریہ کے سی پی اوز/سیلرز ، ان کے اہلِ خانہ اور سول آبادی کی ایک کثیر تعداد نے اس فن فیئر میں شرکت کی۔