پاکستان کی پہلی زلمی مدرسہ لیگ النجوم رائزرز نے جیت لی

پشاور: پاکستان کی پہلی اور تاریخی زلمی مدرسہ لیگ النجوم زائزرز نے 4 وکٹوں سے جیت لی۔

پاکستان کی پہلی اور تاریخی زلمی مدرسہ لیگ کا شاندار فائنل ارباب نیاز اسٹیڈیم پشاور میں کھیلا گیا۔ جس میں پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے الواحدہ فائٹرز نے تین وکٹوں کے نقصان پر ایک سو چار (104) رنز بناکر النجوم رائزرز کو جیت کے لیے 105 رنز کا ہدف دیا۔

الواحدہ فائٹرز کی جانب سے عادل نواز 42 اور جیلیل 20 رنز بناکر نمایاں رہے جبکہ النجوم رائزرز کے کھلاڑی حارث اور لقمان نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

ہدف کا تعاقب النجوم رائزرز نے سنسنی خیز مقابلے کے بعد آخری گیند پر 6 وکٹوں کے نقصان پر پورا کیا۔ جیت کے بعد النجوم رائزرز کے کھلاڑیوں اور حامیوں نے خوشی کا اظہار کیا۔

پاکستان کے لیجنڈ بیٹسمین یونس خان اختتامی تقریب کے مہمان خصوصی تھے۔ قومی ہیرو یونس خان, چیئرمین پشاور زلمی جاوید آفریدی، ہیڈ کوچ محمد اکرم، وزیر مذہبی امور نور الحق قادری اور دیگر نے انعامات تقسیم کیے۔

اس موقع پر یونس خان کا کہنا تھا کہ زلمی مدرسہ لیگ پشاور زلمی فاؤنڈیشن کا بہترین اقدام ہے اور مدارس کے طلبا کو کھیلوں کی سرگرمیاں فراہم کرنا احسن اقدام ہے۔ ان مدارس سے جہاں کرکٹ کا ٹیلنٹ سامنے آئیگا وہیں مذہبی روادای کو فروغ ملے گا۔

چیئرمین جاوید آفریدی کا کہنا تھا کہ پشاور زلمی اور زلمی فاؤنڈیشن پاکستان اور خیبر پختونخواہ میں خدمت کا سلسلہ جاری رکھے گی۔ زلمی فاؤنڈیشن کے تحت زلمی مدرسہ لیگ کے انعقاد سے مدارس کے طلبہ کو کھیلوں کی سہولیات فراہم کرنے کا مشن شروع کیا ہے۔

جاوید آفریدی کا کہنا تھا کہ اسے آگے بڑھائیں گے مستقبل میں پاکستان کے دیگر شہروں میں بھی زلمی مدرسہ لیگ کا انعقاد کریں گے۔ اس کے علاوہ پشاور زلمی کے ڈائریکٹر کرکٹ اور ہیڈ کوچ محمد اکرم کا کہنا تھا کہ مدارس کے طلبا کو اس لیگ کے بعد کرکٹ کھیلنے کا سامان اور کوچنگ مہیا کریں گے۔

زلمی مدرسہ لیگ میں خیبر پختونخواہ کے بارہ مدارس نے شرکت کی تھی۔ لیگ کو پاکستان کے ساتھ غیر ملکی میڈیا میں بھی نمایاں کوریج ملی ہے۔