یوم دفاع و شہداء : سیاسی و حکومتی شخصیات کے پیغامات

اسلام آباد : ملک بھر میں یوم دفاع و شہدا کے موقع پر پروقار تقاریب کا انعقاد کیا جارہا ہے جبکہ  ملک کا دفاع کرتے ہوئے اپنی جانوں کے نذرانے پیش کرنے والے شہداء کی قبروں اور یاد گاروں پر پھول چڑھانے اور فاتحہ خوانی کا سلسلہ جاری ہے۔

اس دن کے مناسب سے سیاسی رہنماؤں اور حکومتی شخصیات نے اپنے پیغام میں شہید جوانوں کو خراج عقیدت پیش کیا۔

بلاول بھٹو زرداری

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے یوم دفاع کے موقع پر پیغام دیتے ہوئے کہا کہ وطنِ عزیز کے دفاع کی خاطر جام شہادت نوش کرنے والے ہمارے ہیرو ہیں، انہیں ہمیشہ یاد رکھا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ یومِ دفاع کو شایانِ شان انداز میں منانا ہی ملکی سرحدوں اور جمہوریت کی حفاظت ہے، انتہا پسندی و عسکریت پسندی بنیادی خطرہ ہے، تمام قوم و اداروں کو دفاعِ وطن کی خاطر ایک پیج پر ہونا ہوگا۔

بلاول بھٹو زرداری کا اپنے پیغام میں مزید کہنا تھا کہ شہید بھٹو نے خطے میں بھارت کے جوہری تسلط آمیز ارادوں کو بھانپ لیا تھا اس لیے انہوں نے سیکیورٹی توازن برقرار رکھنے کے لیے جوہری پروگرام کی بنیاد رکھی۔

آصف علی زرداری

سابق صدر آصف علی زرداری نے کہا کہ ہم قوم کے ان بیٹوں اور بیٹیوں کی قربانیوں کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جنہوں نے وطن کا دفاع کرتے ہوئے اپنی جان کا نذرانہ پیش کیا۔

امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق

امیر جماعت اسلامی سینیٹر سراج الحق کا اپنے پیغام میں کہنا تھا کہ پاک وطن کے دفاع کے لیے قوم تن من دھن قربان کرنے کو تیار ہے، سرحدوں کی حفاظت کے لیے جانیں نچھاور کرنے والے قوم کے محسن ہیں۔

سراج الحق نے کہا کہ قوم اپنے شہدا کی قربانیوں کو کبھی فراموش نہیں کرے گی، ہمیں پاکستان کے جغرافیہ کے ساتھ اس کے نظریہ کی بھی حفاظت کرنا ہوگی۔

وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار

وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اپنے پیغام میں کہا کہ شہدا اور غازیوں کی جرأت اور بہادری کو سلام پیش کرتا ہوں، نئے پاکستان میں پوری قوم نئے جوش اور ولولے کے ساتھ یوم دفاع و شہداء منا رہی ہے۔

عثمان بزدار نے کہا کہ پاک افواج نے دفاع وطن کی جنگ میں بہادری کی بےمثال داستانیں رقم کیں، 65ء کی جنگ میں پاک افواج دشمن کے سامنے سیسہ پلائی دیوار ثابت ہوئی اور پاک افواج نے پاکستان پر جارحیت کرنے والے دشمن کو منہ توڑ جواب دیا۔

گونرسندھ عمران اسماعیل

گونرسندھ عمران اسماعیل نے اپنے پیغام میں کہا کہ فوج کےشہداءکوسلام پیش کرتا ہوں،میں خود ایک شہیدکی بیوہ کاشاگردرہاہوں،میں نے عباسی شہید کی بیگم سےپڑھا ہے،پاک فضائیہ کے شاہینوں کوخراج تحسین پیش کرتا ہوں۔

وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان

وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان کا کہنا تھا کہ 6 ستمبر 1965 کو افواج پاکستان نے دشمن کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دیا تھا، آزادی کی حفاظت کرنا بخوبی جانتے ہیں، دشمن کسی غلط فہمی میں نہ رہے۔

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے مزید کہا کہ ضرورت پڑنے پر کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے، جانوں کا نذرانہ پیش کرنے والے شہداء کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔

گونربلوچستان محمد خان اچکزئی

گونربلوچستان محمد خان اچکزئی کا کہنا تھا کہ پاکستان کی تاریخ میں 6 ستمبر کا دن بے انتہا اہمیت رکھتا ہے، 1965ء میں دشمن کی جارحیت کا منہ توڑ جواب دیکر تاریخ رقم کی گئی۔

گورنر بلوچستان نے مزید کہا کہ اپنے عظیم شہداء کی قربانیوں کو رائیگاں نہیں جانے دیں گے، وطن کے تحفظ، سالمیت اور دفاع کے لیے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال نے یوم دفاع پر پیغام دیا کہ جام کمال نے یوم دفاع پر اپنے پیغام میں کہا کہ قوم 1965ء کی طرح آج بھی متحد ہے، قوم دشمن کے ارادوں کو ناکام بنانے کے لیے پوری طرح پرُ عزم ہے۔

جام کمال خان نے کہا کہ پاک فوج نے دہشت گردوں کے خلاف شاندار کامیابیاں حاصل کیں، مسلح افواج کا عزم آج بھی اتنا ہی بلند ہے جتنا 1965ء کی جنگ کے دوران تھا۔