اسپین نے سعودی عرب کو بموں کی ترسیل روک دی

میڈرڈ : ہسپانوی حکام نے سعودی عرب کو بموں کی ترسیل روک دی۔ یہ اقدام یمن میں کنگی صورت حال کے تناظر میں اٹھایا گیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اسپین نے سعودی عرب کو دفاعی ہتھیار فروخت کرنے کا معاہدہ منسوخ کرتے ہوئے لیزر گائیڈڈ بم دینے سے انکار کردیا۔

ہسپانوی حکام کی جانب سے اعلان کی گیا ہے کہ سعودی عسکری اتحاد کی جانب سے یمن میں حملوں کے پیش نظر وہ سعودی عرب کو بموں کی ترسیل نہیں کرے گا۔

ہسپانوی حکام کا کہنا ہے کہ اسپین نے ریاض حکومت کو بموں کی فروخت یمن جنگ میں استعمال کرنے کے خدشات کے تحت روکی ہے۔

واضح رہے کہ اسپین نے 2015 میں سعودی عرب کو 400 لیزر گائیڈڈ بموں کی فروخت کا معاہدہ کیا تھا جس کے تحت سعودی حکوت کو بموں کی ترسیل کی جاتی تھی۔

تاہم اب مرکز میں بننے والی میڈرڈ حکومت نے ریاض سے معاہدہ منسوخ کرتے ہوئے رقم واپس کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔