امریکا بلوچ علیحدگی پسند تحریک کی حمایت نہیں کرتا، ایلس ویلز

واشنگٹن : امریکی دفتر خارجہ کی سینئر اہل کار ایلس ویلز کا کہنا ہے کہ امریکا بلوچ علیحدگی پسند تحریک کی حمایت نہیں کرتا بلکہ امریکا پاکستان کی علاقائی سلامتی کی حمایت کر تا ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق امریکی دفتر خارجہ کی سینئر اہل کار ایلس ویلز نے واشنگٹن میں امریکی نشریاتی ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ امریکی حکومت کی جانب سے تحریک طالبان پاکستان کے تین رہنماؤں کے بارے میں اطلاع دینے پر انعام کے اعلان سےظاہر ہوتا ہے کہ امریکہ ان گروہوں کے بھی خلاف ہے جو پاکستان مخالف ہیں اور ان کے بھی جو افغانستان کے خلاف کارروائیاں کر رہے ہیں۔

ایلس ویلز نے کہا کہ امریکا نے فی الحال پاکستان کی جانب سے دہشت گرد تنظیموں کے خلاف فیصلہ کن اقدامات نہیں دیکھے۔
ایلس ویلز نے امریکا پاکستان اور افغانستان کے بارے میں کہا کہ تھاکہ امریکا پاکستان اور افغانستان کے درمیان بہتر تعلقات کے لیے ان کوششوں کے حق میں ہے جو پاکستانی آرمی چیف جنرل قمر باجوہ کے اکتوبر 2017 کے دورہ ٴکابل کے موقع پر دونوں ملکوں کے درمیان معاہدے کے لیے کی گئی تھیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ کہ افغان صدر کی طالبان کو سیاسی دھارے میں شمولیت کی دعوت سنجیدہ قدم ہے، امریکہ پاکستان کے ساتھ ان معاملات پر تعاون کے لیے گفتگو جاری رکھنے کا خواہش مند ہے۔